Ghazal

غزل

تو بھی ہے بے وفا کبھی سوچا نہ تھا
ہو جائیں گے جدا کبھی سوچا نہ تھا
یوں ہی دیکھا تھا ہم نے مسکرا کر
ہو جائیں گے خفا کبھٰی سوچا نہ تھا
تم چاہو گےیوں کسی کو شدت سے
وہ بھی میرے سوا کبھی سوچا نہ تھا
شاہیں میری یادوں میں بس جائیں گے

صحرا ہوا کبھی سوچا نہ تھا

ghazal

Advertisements